Latest Urdu news from Pakistan - Peshawar, Lahore, Islamabad

خطےمیں امن کےلیے مسئلہ کشمیر کا حل ناگزیر ہے،سیکرٹری خارجہ

پاکستان امن کا داعی ہے،بھارت کو ذمہ داری کےساتھ جواب دیا،پلوامہ اوراس کے بعد رونما ہونےوالےواقعات میں پاکستان نے ذمہ داری کا مظاہرہ کیا، کشیدگی میں کمی لانے پرعالمی برادری کے شکر گزار ہیں،فغانوں نے اپنے مستقبل کاتعین خود کرنا ،تہمینہ جنجوعہ کا ایس سی او عالمی کانفرنس سے خطاب

0 10

اسلام آباد۔ سیکرٹری خارجہ تہمینہ جنجوعہ نےکہاہےکہ پاکستان نےبھارت کوذمہ داری کےساتھ جواب دیا،خطےکےامن کےلیے مسئلہ کشمیر کا حل ناگزیر ہے۔

اسلام آباد میں مستقبل کےامکانات اورعلاقائی رابطوں پرایس سی او عالمی کانفرنس منعقد کی گئی جس میں ایس سی او رکن ممالک کے مندوبین نےشرکت کی۔

اس موقع پرسیکرٹری خارجہ تہمینہ جنجوعہ نےخطاب کرتےہوئےکہاکہ پاکستان امن کا داعی ہےاورامن واستحکام سےہی خطے کی ترقی اور خوشحالی ممکن ہےجبکہ پلوامہ اوراس کے بعد رونما ہونے والے واقعات میں پاکستان نے ذمہ داری کا مظاہرہ کیا۔

انہوں نےکہاکہ ہم نےعزم،تحمل اور ذمہ داری کےساتھ بھارت کو جواب دیاہےاورپاک بھارت کشیدگی کےدوران پاکستان دوست ملکوں کے ساتھ رابطےمیں رہا۔سیکرٹری خارجہ کا مزید کہنا تھاکہ کرتارپور،سمجھوتہ ایکسپریس اورہائی کمشنرکی واپسی کےہمارے اقدامات امن کے لیے تھے۔

مسئلہ کشمیر پربات کرتےہوئےانہوں نےکہاکہ خطے کےامن کےلیےمسئلہ کشمیر کاحل ناگزیر ہے جبکہ پاکستان اقوام متحدہ کی قرار دادوں کے مطابق مذاکرات سے مسئلہ کشمیر کا حل چاہتا ہے۔

افغانستان سےمتعلق ان کاکہناتھا کہ افغانوں نےاپنے مستقبل کا تعین خود کرناہے اور افغانوں کے درمیان مذاکرات سےہی دیرپا امن قائم ہوگا جبکہ افغان امن مذاکراتی عمل میں پاکستان کردار ادا کرنے کے لیےتیارہے۔پاک بھارت کشیدگی کے موقع پرسیکرٹری خارجہ تہمینہ جنجوعہ نے کہا تھا کہ پاکستان پر بھارتی الزامات خطے کے امن کے مفاد میں نہیں ہیں اوربھارت کی جانب سے سوشل میڈیا پر متضاد مواد کو جواز بنانا حقائق کے برخلاف ہے۔انہوں نے کہا کہ کرتار پور،سمجھوتہ ایکسپریس،ہائی کمشنر کی واپسی کےہمارے امن اقدامات ہیں۔

سیکریٹری خارجہ نےکہاکہ پاکستان پی فائیو اوردوست ممالک کےساتھ رابطےمیں رہا،پاک بھارت کشیدگی میں کمی لانےپرعالمی برادری کے شکر گزار ہیں۔

جواب چھوڑیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا.