Latest Urdu news from Pakistan - Peshawar, Lahore, Islamabad

سوات میں زرعی یونیورسٹی کے قیام کا فیصلہ

0 41

پشاور۔صوبائی حکومت نے سوات میں زرعی یونیورسٹی کے قیام کا باضابطہ فیصلہ کرلیا ہے اور اس مقصد کیلئے مینگورہ کے قریب تختہ بند کےمقام پرزرعی تحقیقی ادارہ کی عمارت اوروسیع رقبےکوزیراستعمال لانےاوربہار2020ء سےکلاسزکےاجراء کافیصلہ بھی کیاہےیہ ادارہ پہلےہی زرعی تحقیق کےعلاؤہ بی ایس اورایم ایس تک جامعات کےطلبہ وطالبات کوزراعت کےمختلف شعبوں میں عملی مہارت کی سہولیات مہیاکررہاہےاس ضمن میں زرعی تحقیقی ادارہ تختہ بند میں وزیرزراعت،لائیوسٹاک، فشریزوڈیری ڈویلپمنٹ محب اللہ خان کی زیر صدارت اعلی سطح کااجلاس ہواجس میں کافی غوروخوض کےبعد صوبےمیں پشاوراورلکی مروت کےبعد اپنی نوعیت کی اس تیسری منفرد زرعی یونیورسٹی کے قیام کا فیصلہ ہوا اورا سکے خدوخال سمیت تمام پہلوؤں کا تفصیلی جائزہ لیا گیا.

واضح رہےکہ وزیراعلیٰ محمود خان نےبھی سوات میں زرعی یونیورسٹی کی ضرورت محسوس کرتےہوئےاس پرعملی پیشرفت کی ہدایت کی ہےوزیرزراعت کی زیرصدارت اجلاس میں چیئرمین ڈیڈیک فضل حکیم خان،سیکرٹری زراعت محمد اسرارخان،وائس چانسلرزرعی یونیورسٹی پشاور ڈاکٹر جہان بخت خان،انکےہمراہ مختلف شعبوں کےڈین صاحبان،زرعی تحقیق کےڈائریکٹرجنرل ڈاکٹرنوید اختروڈائریکٹر محمد ایاز خان اوردیگر متعلقہ اعلیٰ حکام نے شرکت کی اجلاس میں فیصلہ کیا گیاکہ بہار2020ءمیں زرعی یونیورسٹی سوات کےزیر اہتمام کلاسز کےاجراءپرپہلےچارسمسٹر عمومی زراعت پر مشتمل ہونگےجبکہ باقی سمسٹرمیں بتدریج ہارٹیکلچریعنی باغبانی،فوڈسائنسز وٹیکنالوجی اور لائیوسٹاک کےتین اہم ترین شعبے متعارف کئےجائیں گےان تینوں شعبوں کی پورے ملاکنڈ ڈویژن میں انتہائی ضرورت بھی ہے.

اجلاس میں نئی یونیورسٹی کےقیام کاعمل تیزکرنےاوردرپیش مسائل کےفوری حل کیلئےدو کمیٹیاں بنانےکااصولی فیصلہ بھی کیاگیاخیبر پختونخوا کےوزیرزراعت،لائیوسٹاک، فشریز وڈیری ڈویلپمنٹ محب اللہ خان نےاجلاس سےخطاب کرتےہوئےکہاکہ نئی یونیورسٹی زراعت کےتمام شعبوں میں اعلیٰ تعلیم،فی ایکڑ پیداوار میں اضافے،پھلوں وسبزیوں اورفصلوں کی نئی ورائٹیزکی دریافت اورجدت وتحقیق کی نت نئی جہات متعارف کرنےکےعلاؤہ کلائمیٹ چینج کےتقاضوں کااحاطہ بھی کرےگی.

انہوں نےکہاکہ پی ٹی آئی کی حکومت ضرورت کی بنیاد پرنئی جامعات کےقیام کےعلاوہ قومی معیشت کی بہتری کیلئےٹھوس اقدامات کر رہی ہےتمام شعبوں کی طرح زراعت میں بھی انقلابی اقدامات کئےجارہےہیں جس سےغذائی پیداوارمیں اضافےکےعلاوہ دیہی وشہری دونوں سطح پر روزگار کےمواقع میں زبردست اضافہ ہوگا تعلیم یافتہ نوجوانوں کیلئے خود روزگاری کےبے پناہ مواقع مہیا ہوں گے.

انہوں نےکہاکہ ہماری حکومت ترقی کےواضح اہداف اورشفافیت پریقین رکھتی ہےجوماضی کی حکومتوں کی طرح نہ توکرپشن کی نت نئی کہانیاں دہرائےگی اورنہ ہی سطحی اقدامات اورزبانی جمع خرچ کےذریعےعوام کی وقتی خوشی اورہمدردیاں حاصل کرنےکی کوشش کرے گی انہوں نےسوات میں زرعی یونیورسٹی کےقیام میں واضح پیشرفت اورزرعی تحقیق کو فروغ دینےپرمحکمہ زراعت کی کاوشوں کو سراہا۔

جواب چھوڑیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا.