Latest Urdu news from Pakistan - Peshawar, Lahore, Islamabad

حکومتی اتحاد میں دراڑیں؛وزیراعلیٰ پنجاب ق لیگ کے تحفظات دور کرنے میں ناکام

عثمان بزدار کا مسلم لیگ ق کے تحفظات کو وزیراعظم کے پاس لے جانے کا فیصلہ کیا

لاہور۔وزیراعلیٰ پنجاب عثمان بزدار مسلم لیگ ق کےتحفظات دورکرنےمیں ناکام ہوگئےاوراب انہوں نےاپنی اتحادی جماعت کےتحفظات اور مطالبات کو وزیراعظم عمران خان کےپاس لےجانےکا فیصلہ کیا ہے۔

وزیراعلیٰ پنجاب عثمان بزدار اور اسپیکر پنجاب اسمبلی چوہدری پرویز الہی کی گزشتہ شب ملاقات کی اندرونی کہانی سامنے آگئی۔

چوہدری پرویز الہی نےعثمان بزدار سےشکوہ کیاکہ آپ اورآپ کی قیادت سےاتحاد کےجو معاملات طےہوئےتھےان پرتاحال عمل درآمد نہیں ہوا،یہ بھی طے ہوا تھا کہ مرکزاورپنجاب میں ق لیگ کو دو دو وزارتیں ملیں گی لیکن ایسانہ ہوا۔

وزیراعلی پنجاب سردارعثمان بزدارنےاس بات سےلاعلمی کا اظہارکرتےہوئےکہا کہ وہ معاملےپروزیراعظم عمران خان سےبات کریں گے۔ چوہدری پرویز الہی نےعثمان بزدارسےکہاکہ آپ کےوالد سےمیرے ذاتی تعلقات تھےلیکن پھر بھی معاملات صحیح طرح نہیں چل رہے۔

وزیراعلی پنجاب نےپرویزالہی کو یقین دہانی کرائی کہ ق لیگ کےمطابق جوبھی پوسٹنگ ٹرانسفراوردوسرےانتظامی کام ہیں وہ فوری ہوں گے۔ تاہم چوہدری پرویز الہی نے کہا کہ پوسٹنگ ٹرانسفر کوئی مسئلہ نہیں بلکہ اتحادیوں کےدرمیان جو معاہدے ہوتے ہیں ان پرعمل ہونا چاہیے۔

ذرائع کے مطابق چوہدری پرویز الہی کی شدید خفگی دور نہ ہوئی اور وزیر اعلی انہیں منانےمیں ناکام رہے۔

ق لیگ سےتعلق رکھنےوالےوزیرمعدنیات پنجاب عماریاسر کےاستعفےکا معاملہ بھی حل نہ ہوسکا۔چوہدری پرویزالہی نےمزید کہاکہ ملکی معاملات جس طرف جارہےہیں وہ صحیح نہیں اورصورتحال کو ٹھیک کرنا ہوگا،مہنگائی میں کمی اورمعاشی معاملات ٹھیک نہ ہوئےتو پھر اتحاد اورحکومت کی دوسری چیزیں ثانوی حیثیت اختیار کر جائیں گی۔

گزشتہ روزمسلم لیگ ق سےتعلق رکھنےوالےوزیر معدنیات پنجاب عمار یاسرنےعہدے سےیہ کہہ کراستعفیٰ دےدیاکہ انکےکام میں مداخلت کی جارہی ہے۔پھر چند روز قبل وفاقی وزیراطلاعات فواد چوہدری کےمسلم لیگ(ق)میں فارورڈ بلاک بنانےکےبیان پر ق لیگ کےرہنما چوہدری مونس الٰہی نے شدید ردعمل ظاہر کرتےہوئےکہا تھا کہ پی ٹی آئی سے اتحاد ختم بھی ہوسکتا ہے۔

جواب چھوڑیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا.