Latest Urdu news from Pakistan - Peshawar, Lahore, Islamabad

پاکستان اورافغانستان میں اے پی اے پی پی ایس کاپہلا جائزہ اجلاس،افغان امن عمل پرگفتگو

افغانوں کی اپنی قیادت میں ہونے والے اجتماعی مفاہمتی عمل کے ذریعے سے ہی پائیدار امن اور استحکام کا مقصد حاصل کیاجاسکتا ہے، پاکستان

اسلام آباد۔پاکستان نےکہا ہےکہ افغانوں کوقابل قبول اورافغانوں کی اپنی قیادت میں ہونےوالےاجتماعی مفاہمتی عمل کےذریعےسے ہی پائیدار امن اور استحکام کا مقصد حاصل کیاجاسکتا ہے۔

منگل کو جاری بیان کےمطابق پاکستان اورافغانستان میں اےپی اےپی پی ایس کاپہلا جائزہ اجلاس دس جون کواسلاآباد میں منعقد ہوا۔اجلاس میں سیکریڑی خارجہ سہیل محمود نے پاکستانی وفد کی قیادت کی جبکہ نائب وزیر خارجہ ج ادریس زمان نےافغان وفد کی نمائندگی کی۔

پاکستان اورافغانستان کےدرمیان مئی2018 میں’اے پی اے پی پی ایس’ کاقیام عمل میں آیاتھا۔سیاسی وسفارتی، فوج کی سطح پرتعاون،انٹیلی جنس تعاون،معیشت اورمہاجرین سےمتعلق امورکاگروپ شامل ہے۔

سیکرٹری خارجہ نےپاکستان کےعزم کااعادہ کیاکہ پاکستان باہمی اعتماد اوردونوں ممالک کےعوام کےمفاد میں افغانستان کےساتھ قریبی برادرانہ تعلقات کےفروغ کا خواہاں ہے۔

اس عزم کودہرایاگیاکہ پاکستان پرامن،مستحکم،متحد اورخوشحال افغانستان کامتمنی ہےپاکستان نے اس امرپر زوردیاکہ افغانوں کوقابل قبول اورافغانوں کی اپنی قیادت میں ہونےوالےاجتماعی مفاہمتی عمل کےذریعےسےہی پائیدارامن اوراستحکام کا مقصد حاصل کیاجاسکتا ہے۔

اجلاس میں پانچ ‘ورکنگ گروپس’ کےسربراہان نےاپنےاپنےشعبہ جات میں ہونےوالی پیشرفت پرروشنی ڈالی۔ مستقبل میں تعاون کومزید بڑھانے بالخصوص متعلقہ اداروں کے درمیان موجودہ تعاون میں وسعت کےلئے’ایکشن پلانز’پر بھی بات چیت کی گئی۔

سیاسی، سفارتی، سلامتی،تجارت،معیشت، ثقافت،تعلیم،کھیل کےشعبوں اورعوامی سطح پرروابط میں اضافےکی اہمیت کو اجاگرکیاگیا۔ اتفاق کیاگیا کہ اے پی اے پی پی ایس’ایک بہترین فورم ہےجس کےذریعےدرپیش چیلنجوں پر قابو پایاجاسکتا ہے،دوطرفہ تعلقات کو نئی جہت سے ہمکنار کیاجاسکتا ہے۔ اس طریقہ کو بھرپور انداز سے بروئے کار لانے پر زوردیاگیا اس سلسلے میں پہلے سے استوار ادارہ جاتی طریقہ کار بشمول’ اے پی ٹی ٹی سی اے’ اور’ جے ای سی’ کی اہمیت کو اجاگرکیاگیا معاشی ترقی اورخوشحالی کے طویل المدتی اہداف کو ان کی حیققی صلاحیت کے مطابق حاصل کیاجاسکے۔

اتفاق کیاگیاکہ’ ے پی اے پی پی ایس ورکنگ گروپس ‘اگلے چند ماہ میں اجلاس منعقد کریں گے تاکہ اس نظم میں استوار روابط کی رفتار برقرار رکھی جاسکے۔ یہ فیصلہ بھی کیاگیا کہ آئندہ جائزہ اجلاس دسمبر دوہزار انیس میں افغانستان کے دارالحکومت کابل میں ہوگا۔

جواب چھوڑیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا.