Latest Urdu news from Pakistan - Peshawar, Lahore, Islamabad
براؤزنگ زمرہ

بلاگ

عمر حیات محل چنیوٹ, تحریر: محمد اظہر حفیظ

خواھش تھی کہ عمر حیات محل دیکھا جائے، پھر کچھ دوستوں نے بتایا کہ اس کی حالت اتنی اچھی نہیں ھے سب سے اوپر والی منزل پر تو جانے کی اجازت بھی نہیں ھے، جس سے بھی رابطہ کیا ،کچھ دوست اسلام آباد پہنچنے والے تھے اور کچھ لاھور تھے پر جانے کی ٹھان لی، یہ بھی بتایا گیا کہ سڑکیں بہت خراب ھیں، پر میں کہاں رکنے والا تھا، میں اور میرا کیمرہ ھم دونوں ھی اکثر ھمسفر ھوتے ھیں، دونوں نکل پڑے میدان میں، بہت سارے…
مزید پڑھ...

پرانی کتابیں – فخرالدین کیفیؔ

پرانی کتابوں کی ترتیب سے بہت فائدہ ہوتا ہے کبھی کوئی غزل مل جاتی ہے کبھی کوئی گم شدہ دستاویز کبھی کسی کی دی ہوئی تصویر کبھی مرجھائے ہوئے پھول بھولی بسری یادوں کا سرمایہ چھپائے رکھتی ہیں ہائے کیا چیز ہیں کتابیں بھی
مزید پڑھ...

اپوزیشن، حکومت اور اسٹیبلشمنٹ پریشان کیوں ؟, تحریر: حضرت خان مہمند

موجودہ صورتحال میں حکومت ، اپوزیش اور اسٹیبلشمنٹ تینوں شدید اضطراب میں مبتلا ہیں جس کی بنیادی وجہ خود اسٹیبلشمنٹ ہے اپوزیشن اور حکمرانوں کو یہ بات سمجھ نہیں آرہی ہے کہ آئندہ آنے والے وقتوں میں اسٹیبلشمنٹ کی کیا حکمت عملی ہوگی جس کے کھیل سے دونوں حکمران اور اپوزیشن لاعلم ہیں حکمران دراصل اس لئے پریشان ہیں کہ ایسا نہ ہو کہ حزب اختلاف کے احتجاج کی آڑ میں ان کی حکومت ختم ہو انھیں اس بات کا بھی خوف ہے…
مزید پڑھ...

ڈیرہ اسماعیل خان مسائل کے گرداب میں، تحریر: نصیراعظم محسود

ڈیرہ اسماعیل خان آبادی کے لحاظ سے خیبر پختونخوا کا پانچواں بڑا ضلع ہے جس کی آبادی تقریبا سولہ لاکھ سے زائد ہے،اپنی جغرفیائی لحاظ سے یہ خیبرپختونخوا کو افغانستان سمیت بلوچستان اور صوبہ پنجاب سے ملاتا ہے اسی وجہ سے سی پیک جیسے منصوبے کی مغربی راہ داری کا مرکز ہے،یہ ضلع اٹھارہ لاکھ ایکڑ ز پر محیط ہے جس میں گومل زام ڈیم،سی آر بی سی کینال،پہاڑ پور کینال اور دریائے سندھ کے ذریعے تقریباً چارلاکھ ایکڑ…
مزید پڑھ...

“جہد مسلسل”, پروفیسر محمد اعجاز بشیر

ہر انسان زندگی میں کامیاب ہونا چاہتا ہے اور ہر انسان کی کامیابی کا معیار دوسرے سے الگ ہوتا ہے اپنی منزل کے حصول کے لیے انتھک محنت کرتا ہے اپنی زندگی کے شاندار چودہ یا سولہ سال تعلیم کے میدان میں اپنی زندگی کو سنوارنے میں لگا دیتا ہے اور تعلیم مکمل کرنے کے بعد ہم اپنی مز ید تعلیم اور ٹریننگ دونوں کو روک دیتے ہیں اور یوں اپنی زندگی میں stuck ہو جاتے ہیں رک جاتے ہیں ہم سب اپنی زندگی میں دو چار سال کے…
مزید پڑھ...

جونک, تحریر محمد اظہر حفیظ

گاوں میں ھمارے سکول کے ساتھ ایک چھپڑ ھوتا تھا جس میں جانور پانی پینے اور نہانے آتے تھے اور جب باھر نکلتے تھے تو ان کے جسم پر کالے رنگ کے لمبے لمبے موٹے سست قسم کے کیڑے لٹک رھے ھوتے تھے جن کو جانوروں کے مالکان فورا ان کے جسم سے اتارتے تھے اور ھلاک کردیتے تھے پر وھاں سے خون نکلنا شروع ھوجاتا تھا، پھر پتہ چلا کہ اس کو جونک کہتے ھیں جس کا کام ھی خون چوسنا ھے، اکثر حکیم حضرات شروع شروع میں جسم سے گندے…
مزید پڑھ...

کرونا شکریہ. تحریر: محمد اظہر حفیظ

کوویڈ- 19 شاید ایک خطرناک وائرس یا وباء ھو، مجھ سے بہتر کون جان سکتا ھے جس نے اپنے عزیز ترین دوست طیب نوید اور غزوان شمشاد کھو دیئے، بہت سے دوستوں کو زندگی میں واپس آتے بھی دیکھا، پر سمندر کی گہرائی کا اندازہ اس میں اتر کر ھی محسوس کیا جاسکتا ھے، باھر کھڑے ھوکر نہیں، اکتوبر کا مہینہ شروع ھوا مجھے بھی پیٹ درد اور ھلکے بخار سے بیماری کا آغاز ھوا سب نے کہا موسمی بخار ھے اور پیناڈول کھانا شروع کردی،…
مزید پڑھ...

ٹک ٹاک کا جنون اب ختم ! تحریر: آمنہ سجاد کیانی

سوشل میڈیا استعمال کرنے والے صارفین تو ٹک ٹاک نامی ایپ سے بخوبی واقف ھوں گے کیونکہ آج کل اس ایپ کو پاکستان میں اس قدر پزیرائی حاصل ہے کہ دو سال کا کمسن بچہ بھی اس ایپ کے بارے میں آگاہی رکھتا ہو گا۔ ٹک ٹاک چاہنہ کی ایک مشہور و معروف ایپ ہے ۔ جس کو صرف پاکستان ہی نہیں بلکہ دیگر ممالک میں بھی لاکھوں نہیں بلکہ کروڑوں افراد استعمال کرتے ہیں ہمارے پڑوسی ملک بھارت میں بھی پاکستان کی طرح اس ایپ کو بہت…
مزید پڑھ...

کارڈ ختم ہونے لگے, تحریر: نوید چودھری

غداری کارڈ جل چکا ، کرپشن کارڈ پھٹ چکا ، جج کارڈ بھی بہت جلد ناکارہ ہو جائے گا ، تمام اپوزیشن جماعتوں کو بیک وقت نشانہ بنانے کا منصوبہ الٹا گلے پڑ گیا ، آج عالم یہ ہے کہ کھیل وزیر اعظم عمران خان اور انکی حکومت کی بساط سے مکمل طور پر باہر ہے ، طاقت کی مستی نے یہ دن بہر حال دکھانا ہی دکھانا تھا ، کیا تماشہ تھا کہ جب چاہا کسی کو غدار قرار دے دیا ، کسی کو کرپٹ بنا ڈالا ، کسی کو کٹھ پتلی ججوں کے ذریعے…
مزید پڑھ...

آخر کب تک …جنوبی وزیرستان محکمہ تعلیم میں جاری کرپشن – تحریر: نصیراعظم محسود

جنوبی وزیرستان محکمہ تعلیم میں ہونے والی کرپشن پر بار بار انکوائری ٹیم کے چھاپے اور اسکے بعد مکمل خاموشی عوام کے دلوں میں کئی سوالات اٹھ رہے ہیں کہ آخرکار ان غیر قانونی بھرتیوں اور تعلیمی محکمی میں کی گئی کرپشن یا جاری کرپشن کے خلاف انکوائریاں منطقی انجام تک کیوں نہیں پہنچتی ذرائع کے مطابق جنوبی وزیرستان محکمہ ایجوکیشن میں ایک اندازے کے مطابق 2200 تک غیر قانونی اساتذہ کی مختلف پوسٹوں پر بھرتیاں…
مزید پڑھ...